عالمی خبریں

بھارت سے پاکستان غلطی سے میزائل فائر ہونے کا معاملہ،بھارت نے فضائیہ کے تین افسران کو برطرف کر دیا

خلیج اردو

نئی دہلی:بھارتی فضائیہ نے بتایا ہے کہ حکومت نے مارچ میں غلطی سے پاکستان میں میزائل فائر کرنے کے الزام میں تین افسران کو برطرف کر دیا ہے۔

 

برہموس میزائل جو جوہری صلاحیت رکھنے والا، زمین پر حملہ کرنے والا کروز میزائل روس اور بھارت نے مشترکہ طور پر تیار کیا تھا – کو 9 مارچ کو فائر کیا گیا تھا، جس سے پاکستان کو حادثاتی لانچوں کو روکنے کے لیے حفاظتی طریقہ کار پر نئی دہلی سے جواب طلب کرنے پر مجبور کیا گیا تھا۔

متعلقہ مضامین / خبریں

 

فضائیہ نے ایک بیان میں کہا کہ مقدمہ کے حقائق کو قائم کرنے کے لیے قائم کی گئی کورٹ آف انکوائری، جس میں واقعے کی ذمہ داری کا تعین بھی شامل ہے۔

 

انکوائری میں پایا گیا کہ تین افسران کی جانب سے معیاری آپریٹنگ طریقہ کار سے انحراف کے نتیجے میں میزائل کو حادثاتی طور پر فائر کیا گیا۔

 

سرکاری اعلامیے میں کہا گیا ہے کہ یہ ایک ایسا واقعہ ہے جسے دو جوہری ہتھیاروں سے لیس حریفوں نے سکون سے سنبھالا کیونکہ کوئی جانی نقصان نہیں ہوا۔

 

عسکری ماہرین ماضی میں ان پڑوسیوں کی طرف سے حادثات یا غلط حساب کتاب کے خطرے سے خبردار کر چکے ہیں جو تین جنگیں لڑ چکے ہیں اور متعدد چھوٹی مسلح جھڑپوں میں ملوث ہیں۔

 

پاکستان نے واقعے پر شدید احتجاج کیا تھا اور واقعے کی انکوائری کا مطالبہ کر دیا تھا جبکہ اس غلطی کو ناقابل قبول اور بھارتی کی جنگی صلاحیتوں میں بڑا نقص قرار دیا تھا۔

متعلقہ مضامین / خبریں

Back to top button