عالمی خبریں

ایران کا کروز میزائل تیار کرنے اور 1650 کلومیٹرز تک ہدف حاصل کرنے کا دعویٰ

خلیج اردو

ایران کے پاسداران انقلاب کے کمانڈر نے کہا ہے کہ ایران نے ایک ہزار 650 کلو میٹرز تک مار کرنے والا کروز میزائل تیار کرلیا ہے۔

برطانوی میڈیاکے مطابق پاسدارن انقلاب ایرو اسپیس فورس کے سربراہ امیر علی حاجی زادہ نے ایران کے سرکاری ٹی وی کو بتایا کہ ’’ہمارا 1650 کلو میٹر تک مار کرنے والا کروز میزائل اسلامی جمہوریہ ایران کے میزائل ہتھیاروں میں شامل کرلیا گیا ہے۔‘‘

حاجی زادہ نے کہا کہ بغداد میں 2020 میں امریکی ڈرون حملے میں ایرانی فوجی کمانڈر قاسم سلیمانی کی ہلاکت کے بعد جب عراق میں امریکی زیر قیادت افواج پر بیلسٹک میزائل حملہ کیا تو اس وقت ایران ’’غریب فوجیوں‘‘ کو مارنا نہیں چاہتا تھا۔

متعلقہ مضامین / خبریں

انہوں نے کہا کہ ہم ٹرمپ کو مارنے کے درپے ہیں۔ (سابق وزیر خارجہ مائیک) پومپیو اور (سلیمانی کو قتل کرنے) کا حکم دینے والے فوجی کمانڈروں کو مار دینا چاہیے۔‘‘

ایرانی رہنماؤں کی جانب سے اکثر قاسم سلیمانی کا بدلہ لینے کے عزم کا اظہار کیا جاتا رہا ہے۔ ایران نے امریکا کی مخالفت اور یورپی ممالک کی طرف سے تشویش کے اظہار کے باوجود اپنے میزائل پروگرام بالخصوص اپنے بیلسٹک میزائلوں کو وسعت دی ہے۔

تہران کا کہنا ہے کہ یہ پروگرام خالصتاً دفاعی اور ڈیٹرنٹ نوعیت کا ہے۔

ایران کا کہنا ہے کہ اس نے یوکرین میں جنگ کے آغاز سے قبل ماسکو کو ڈرون فراہم کیے تھے۔ روس نے یہ ڈرون پاور اسٹیشنز اور سویلین انفراسٹرکچر کو ہدف بنانے کیلئے استعمال کیے ہیں۔

 

متعلقہ مضامین / خبریں

Back to top button