عالمی خبریں

روس کا یوکرین کی ایک قصبے پر کنٹرول کا دعویٰ ، کیف کی تردید

خلیج اردو

لندن :روسی نیم فوجی تنظیم ’’ ویگنر گروپ ‘‘نے مشرقی یوکرین میں سولیدار قصبے پر کنٹرول کا دعویٰ کیا ہے جبکہ کیف کی جانب سے دعوے کو مسترد کرتے ہوئے کہا گیا ہے کہ کوشش ناکام بنا دی گئی ہے۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق روس کے میڈیا نے ویگنر کے سربراہ یوگینی پریگوزین نے ایک بیان جاری کیا جس میں اس نے کہا کہ یوکرینی باشندے اب شہر کے مرکز میں محصور ہو چکے ہیں جبکہ اس سے قبل یوکرین کی نائب وزیر دفاع حنا ملیار نے کہا تھا کہ بھاری لڑائی جاری ہے تاہم دونوں فریقوں کے دعوؤں کی آزادانہ طور پر تصدیق نہیں ہو سکی ہے۔

منگل کو پریگوزن نے اپنے ایک بیان میں کہا کہ واگنر یونٹوں نے سولیدار کے پورے علاقے کا کنٹرول سنبھال لیا ہے، شہر کے وسط میں ایک کولڈرن تشکیل دیا گیا ہے جس میں شہری لڑائی جاری ہے، صرف ویگنر کے جنگجو جو روسی مسلح افواج کا حصہ نہیں ہیں سولیدار کے ’’ طوفان ‘‘ میں حصہ لے رہے تھے۔

متعلقہ مضامین / خبریں

دریں اثنا ملیار نے اس سے چند گھنٹے قبل کہا تھا کہ دشمن اپنے اہلکاروں کے بڑے نقصانات پر توجہ نہیں دیتا اور اپنی حالیہ سرگرمی سے طوفان جاری رکھے ہوئے ہے، ہماری پوزیشنوں تک پہنچنے کے لیے صرف دشمن کے مردہ جنگجوؤں کی لاشیں بکھری ہوئی ہیں، ہمارے جنگجو بہادری سے دفاع کر رہے ہیں۔

قبل ازیں برطانوی وزارت دفاع نے منگل کو کہا تھا کہ روسی فوجی اور ویگنر گروپ کا اب قصبے پر کنٹرول ہونے کا ’’ امکان ‘‘ ہے۔

پیر کے روز یوکرین کے صدر ولادیمیر زیلنسکی نے کہا کہ سولیدار میں تقریباً کوئی زندہ نہیں اور پوری دیواریں باقی نہیں رہیں، یہ پاگل پن کی طرح لگتا ہے، اور منگل کو دیر گئے ایک نئے خطاب میں زیلنسکی نے یوکرائنی افواج کی لچک کی تعریف کی۔

لڑائی کی مزید سختی کے بعد کینیڈا نے کہا کہ وہ یوکرین کے لیے امریکی ساختہ نیشنل ایڈوانسڈ سرفیس ٹو ایئر میزائل سسٹم (NASAMS) خریدے گا۔ ایک امریکی اہلکار نے بتایا کہ یوکرائنی فوجی پیٹریاٹ ایئر ڈیفنس میزائلوں کی تربیت شروع کرنے کے لیے جلد ہی امریکہ پہنچنے والے تھے، جس کا واشنگٹن نے گزشتہ ماہ کیف سے وعدہ کیا تھا۔

یوکرین کو ہتھیار بھیجنے کے علاوہ مغرب نے بارہا ماسکو پر اقتصادی پابندیاں سخت کی ہیں۔ امریکی ٹریژری سکریٹری جینٹ ییلن نے کہا کہ روسی تیل کی قیمت کی حد کا تازہ ترین اقدام ماسکو کی آمدنی کو محدود کرتے ہوئے روسی تیل کو مارکیٹ میں رکھنے کے اپنے اہداف کو حاصل کر رہا ہے۔

متعلقہ مضامین / خبریں

Back to top button